دہلی(یواین اے نیوز8نومبر2019)بابری مسجد اور رام جنم بھومی اراضی ملکیت کا فیصلہ کل یعنی سنیچر کو دس بج کر تیس منٹ پر آئے گا بابری مسجد مقدمہ کا فیصلہ۔پوری دنیا کی ہوگی اسپر نظر۔میڈیا رپورٹس کے مطابق صبح ساڑھے دس بجے فیصلہ سنادیا جائے گا۔ اس دوران اترپردیش میں پولیس کی چوکسی سخت کردی گئی ہے۔واضح رہے کہ فیصلہ کے پیش نظرمرکز کی جانب سے کل ہی ریاستوں اورمرکزی زیرانتظام علاقوں کو ایڈوائزری جاری کی گئی ہے۔

اورچوکسی اختیارکرنے کا مشورہ دیا گیا ہے۔ مرکزی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری کردی ایڈوائزری میں حساس مقامات پرمعقول سیکوریٹی انتظام کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔واضح رہے کہ چیف جسٹس آف انڈیا رنجن گوگوئی ، جسٹس ایس اے بوبڈے ، جسٹس دھننجئے وائی چندرچوڑ ، جسٹس اشوک بھوشن اور جسٹس ایس عبدالنظیر پر مشتمل 5 رکنی بینچ سنیچر کو صبح ساڑھے 10 بجے فیصلہ سنائیں گے۔

آپ کو بتادیں کہ بینچ نے سماعت 16 اکتوبر کو ہی مکمل کرلی تھی۔ بنچ نے اس معاملے میں 6 اگست سے مسلسل 40 دن تک اس معاملے پر سماعت کی۔واضح رہے کی چیف جسٹس رنجن گگوئی اس مہینہ کی 17 تاریخ کو اپنے عہدے سےسبکدوش ہونے والے ہیں۔وہیں اس معاملے میں پورے ملک ہی نہیں بلکہ عالمی طور پر اس فیصلے کو دیکھا جارہاہے۔